Home / تعلیم و صحت / کونسے سرکاری ملازمین کو 2 اگست تک انکم ٹیکس گوشوارے جمع کرانے ہو نگے ، پڑھیے مکمل معلوماتی فیچر
File income tax return to fbr

کونسے سرکاری ملازمین کو 2 اگست تک انکم ٹیکس گوشوارے جمع کرانے ہو نگے ، پڑھیے مکمل معلوماتی فیچر

تحریر : ارشد فاروق بٹ
سوشل میڈیا پر سرکاری ملازمین کے لیے انکم ٹیکس گوشوارے جمع کرانے کی خبریں زیر گردش ہیں. اس حوالے سے سرکاری ملازمین خصوصا اساتذہ کمیونٹی ابہام کا شکار ہے. ٹیچرز کمیونٹی کے وٹس ایپ و فیس بک گروپس میں اساتذہ کی جانب سے بہت سے سوالات پوچھے جارہے ہیں جن کے تسلی بخش جوابات نہیں مل رہے.

ٹیچرز کے جانب سے پوچھے گئے عمومی سوالات یہ ہیں.
کتنی آمدنی والا ٹیچر ٹیکس سے مستثنی ہے اور کتنی آمدن والے کو گوشوارہ بنانا ہوگا؟
جب تنخواہ سے پہلے ہی ٹیکس کٹ رہا ہے تو نیا گوشوارہ بنانا کیوں ضروری ہے؟
گوشوارہ دفتر جمع کرانا ہو گا یا آن لائن ؟
گوشوارے جمع کرانے کی 2 اگست کی ڈیڈ لائن کن اساتذہ کے لیے ہے؟
جو ٹیچر مارچ 2018 میں بھرتی ہوئے ان کے لیے کیا ہدایات ہیں؟ کیا وہ بھی گوشوارے جمع کرائیں گے؟ اور کونسے سکیل والے؟
شناختی کارڈ نمبر ہی این ٹی این ہے یا این ٹی این علیحدہ ہے، اور ریفرنس نمبر کیا ہے؟
گوشوارے کے لیے اپلائی کرنے کا کیا طریقہ کار ہے؟

Rao Ghulam Mustafa
Rao Ghulam Mustafa FBR

اس حوالے سے ہماری ایف بی آر کے سپر وائزر راؤ غلام مصطفے خاں سے ملاقات ہوئی ہےجنہوں نے سرکاری ملازمین و دیگر کاروباری افراد کی معلومات کے لیے ان سوالات کے جوابات دیے ہیں. جن کا خلاصہ کچھ یوں ہے.

سال 2018
جو سرکاری ملازمین یکم جولائی 2017 سے 30 جون 2018 تک ان سروس تھے اور ان کی تنخواہ 4 لاکھ سالانہ سے زائد تھی ان کے لیے آن لائن گوشوارے جمع کرانے کی آخری تاریخ 15 دسمبر 2018 تھی جسے حکومت پاکستان کے حکم پر ایف بی آر نے بڑھا کر 2 اگست 2019 کر دیا تاکہ بہت سے سرکاری ملازمین جن تک درست معلومات نہیں پہنچ سکیں وہ بھی اس سے استفادہ کر سکیں. اس عرصے کے دوران جن سرکاری ملازمین کی سالانہ تنخواہ 4 لاکھ سے کم تھی انہیں آن لائن گوشوارے جمع کرانے کی ضرورت نہیں.

سال 2019
جو سرکاری ملازمین یکم جولائی 2018 سے 30 جون 2019 تک ان سروس تھے اگر ان کی سالانہ تنخواہ 8 لاکھ روپے بنتی ہے تو انہیں آن لائن گوشوارے جمع کرانے ہوں گے اور 8 لاکھ سالانہ تنخواہ پر ایک ہزار روپے اور بارہ لاکھ سالانہ تنخواہ پر 2 ہزار روپے کے حساب سے انکم ٹیکس دینا ہو گا.

سال 2020
نئے مالی سال کے لیے بھی حکومت نے ہدایات جاری کر دی ہیں، یکم جولائی 2019 سے 30 جون 2020 تک ملازمین کے لیے 6 لاکھ سالانہ تنخواہ پر ٹیکس کی چھوٹ ہے اور کاروباری افراد کے لیے یہ حد 4 لاکھ سالانہ انکم ہے. اس سے زائد آمدن ہو تو ٹیکس ادا کرنا ہو گا.

اگر آپ سرکاری ملازم ہیں یا کاروبار سے منسلک ہیں تو ان معلومات کے مطابق اپنی آمدن کا جائزہ لیں اور اگر آپ ٹیکس نیٹ میں آتے ہیں تو ٹیکس جمع کرانے میں دیر نہ کریں، تنخواہ دار ملازمین کے لیے آن لائن E-File کرانا ضروری ہے، اپنے آپ کو رجسٹر کروائیں، آپ یہ کام کسی وکیل یا ایف بی آر کے کسی ملازم کے ذریعے بھی کر سکتے ہیں اور خود بھی ایف بی آر پورٹل پر جا کر اپنے آپ کو رجسٹر کرا سکتے ہیں، وکیل یا کوئی اور شخص بھی آپ کی جانب سے ہی آپ کو رجسٹر کرائے گا. اس کے لیے یہ کام آپ خود بھی کر سکتے ہیں.

ویڈیو دیکھئے:

اپنے آپ کو ایف بی آر پر رجسٹر کرنے کے لیے ایف بی آر کی ویب سائٹ پر جائیں اور آئرس پورٹل کے ذریعے اپنے آپ کو رجسٹر کرائیں.

iris portal fbr
iris portal fbr pakistan

متعلقہ عنوانات :
کونسے سرکاری ملازمین کو 2 اگست تک انکم ٹیکس گوشوارے جمع کرانے ہو نگے ، پڑھیے مکمل معلوماتی فیچر
سال 2019 میں ایف بی آر میں رجسٹریشن کا طریقہ کار
سال 2019 میں ایف بی آر میں اپنا این ٹی این یا ریفرنس نمبر کیسے سرچ کریں، ویڈیو دیکھیے
سال 2019 میں آن لائن ایف بی آر انکم ٹیکس ریٹرن کیسے جمع کرائیں

اس بارے میں مزید پوچھنا چاہیں تو نیچے دئے گئے کمنٹ باکس میں جا کر کمنٹ کریں، ہم حتی الامکان کوشش کریں گے کہ جلد از جلد آپ کے سوال کا جواب دیا جا سکے. شکریہ.

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے